دنیا چاند پر پہنچ گئی اور آپ۔۔۔؟

معاملات کی سنجیدگی کو تباہ کرنے کے لیے سب سے بھونڈی دلیل آج کل کے مغربی تعفن زدہ سوڈو لبرلز (Pseudo Liberals) کی طرف سے یہ دی جاتی ہے کہ میاں دنیا چاند پر پہنچ گئی، مختلف پلانیٹس، سولر سسٹمز، گیلیکسیز، نوواز، سپر نوواز دریافت کرکے ان کی ایوریج عمر، سرفیس اور کور ٹیمپریچر، ان کی آربیٹل ویلاسٹیز، اور پولر ریڈیس اور بلا بلا بلا بلا معلوم کر لی ہے اور آپ ابھی تک زیرِ ناف کے بالوں کے مسائل میں پھنسے ہوئے ہیں؟

مزے کی بات یہ ہے کہ عام طور پر یہ باتیں کرنے والوں کی ذاتی زندگیاں انتہائی ناکامیوں اور مایوسیوں سے گزری ہوتی ہیں۔
جب پڑھنے کی عمر تھی تو پڑھ نہیں سکے، اب جب عمر گزر گئی تو گوگل بادشاہ کا سہارہ لے کر چند ایک سائنسی ویب سائٹس کے نیوز لیٹرز سبسکرائب کروا کر عوام میں دنگل کُشتی کا ماحول بناتے ہیں اور لوگوں کے تعقلات پر نفسیاتی وار کرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:   خدا اور ملحد

پھر ایسے لوگوں کو جب ان کے تمام تر "کوہِ علم" کے ساتھ سکائپ پر آنے کی دعوت دی گئی اور ان سے محض چند ایک اکیڈیمک سوال کیے گئے تو وہ ان بنیادی معلومات سے بھی بے بہرہ نکلے جو کہ ابتدائی سائنس کے سٹوڈنٹس کے لیے بھی کوئی نئے نہیں ہوتے۔

پھر یہ بات بھی ان کی سمجھ میں نہیں آتی کہ ہر ایک نظامِ علم کے اپنے اپنے اہداف ہوتے ہیں، اپنے اپنے مقاصد ہوتے ہیں۔ تم ایک چرچ کے پادری یا مسجد کے مولوی کو کسی سائنسدان کے چاند پر پہنچنے کے قصے سنا کر شرمندہ کر کے کیا ثابت کرنا چاہتے ہو بھئی؟
آپ سے عرض ہے کہ دنیا میں انسانوں کی بہت بڑی تعداد مذہبی مسائل سے زیادہ اس جستجو میں ہے کہ مردانہ طاقت کو بڑھانے کی اچھی دوائیں کونسی ہیں۔ اور وہ اچھی دوا آج تک دریافت نہیں ہو سکی جس پر سب کو مطمئن بھی کیا جاسکے۔
اب کیا ایک فارماکولاجسٹ کو یہ طعنہ دیا جائے کہ دنیا چاند پر پہنچ گئی اور تمہیں اب تک مردانہ کمزوری کی پڑی ہوئی ہے؟
یا پھر ایک انٹرپرینئر کو یہ طعنہ دیا جائے کہ دنیا مریخ کو چھونے والی ہے اور تمہیں پیسے کمانے کے جتن کھوجنے کی پڑی ہوئی ہے؟
اور پھر یہ سوال تو آپ سے بھی کیا جاسکتا ہے میاں۔ کہ دنیا اب آرٹیفیشل انٹیلیجینس اور روباٹک انٹیلیجینس پر کام کر رہی ہے، لیکن آپ اب تک فیس بک فیس بک کھیل رہے ہیں۔
کیوں بھائی؟

یہ بھی پڑھیں:   جدید تہذیب، اسلام اور لباس

(51 مرتبہ دیکھا گیا)

مزمل شیخ بسمل

سلجھا ہوا سا فرد سمجھتے ہیں مجھ کو لوگ الجھا ہوا سا مجھ میں کوئی دوسرا بھی ہے

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

تبصرہ کریں